جمعہ , ستمبر 21 2018
Home / خیبر پختونخوا / ن لیگ کے مزید 8 ارکان اسمبلی مستعفی، جنوبی پنجاب صوبہ محاذ کا اعلان

ن لیگ کے مزید 8 ارکان اسمبلی مستعفی، جنوبی پنجاب صوبہ محاذ کا اعلان

حکمران جماعت پاکستان مسلم لیگ ن کے 6 قومی اور 2 ارکان صوبائی اسمبلی نے مستعفی ہوکر پارٹی چھوڑنے کا اعلان اور جنوبی پنجاب کو الگ صوبے کا درجہ دینے کا مطالبہ کردیا۔

عام انتخابات سے قبل مختلف سیاسی جماعتوں کے ارکان کی وفاداریاں تبدیل کرنے کا سلسلہ جاری ہے تاہم ن لیگ کی مشکلات ختم ہونے کے بجائے مزید بڑھتی جارہی ہیں۔

لاہور میں پریس کانفرنس کے دوران مسلم لیگ ن کے رہنما خسرو بختیار نے قومی اسمبلی کی رکنیت سے مستعفی ہونے کے اعلان کے ساتھ ن لیگ کے 6 ارکان قومی اسمبلی اور 2 ممبران صوبائی اسمبلی کے استعفوں کی تصدیق بھی کی۔

اس موقع پر خسرو بختیار نے جنوبی پنجاب صوبہ محاذ بنانے کا اعلان کرتےہوئے بتایا کہ سابق وزیراعظم بلخ شیریں مزاری اس محاذ کے چیئرمین اور نصراللہ دریشک نائب ہوں گے جب کہ خسرو بختیار کو صدر اور باسط بخاری کو سینئر نائب صدر مقرر کیا گیا ہے۔

نائب صدور میں طاہر اقبال چوہدری، رانا قاسم اور چوہدری سمیع اللہ شامل ہیں جب کہ طاہر بشیر چیمہ جنرل سیکریٹری مقرر کیے گئے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ پریس کانفرنس کا مقصد وفاق کومضبوط اورنئے صوبے کے قیام کا اعلان ہے، ہمارا یک نکاتی ایجنڈا ہے جو جنوبی پنجاب صوبہ بنانا ہے، جنوبی پنجاب کے عوام اور کئی اہم سیاستدان ہمارے ساتھ ہیں۔

خسرو بختیار کا کہنا تھا کہ ہمیں وسائل کی منصفانہ تقسیم بھی نہیں مل رہی، ہمیں وسائل کی منصفانہ تقسیم چاہیے۔

انہوں نے کہا کہ پچھلے 30 برس سے جنوبی پنجاب کے عوام غربت اور جہالت کا شکار رہے، جنوبی پنجاب میں غربت کی شرح 51 فیصد ہے اور یہاں کے عوام بیروزگاری کے عفریت سے لڑرہے ہیں۔

دوسری جانب مسلم لیگ (ن) کے دو ایم پی اے علی اصغر منڈا اور طارق محمود باجوہ نے آزاد حیثیت میں الیکشن لڑنے کا اعلان کیا ہے۔

علی اصغر منڈا 2013 کے عام انتخابات میں پی پی 165 جب کہ طارق محمود باجوہ پی پی 170 سے رکن پنجاب اسمبلی منتخب ہوئے تھے۔

Check Also

سعودی عرب کو سی پیک میں تیسرے ساتھی کے طور پر شراکت کی دعوت دی ہے۔ فواد چوہدری

پاک چین اقتصادی راہداری میں سعودی عرب بھی سرمایہ کاری کرے گا جس کیلئے پاکستان …

Pin It on Pinterest

Shares
Share This