منگل , اپریل 24 2018
Home / بلوچستان / ضلع لکی مروت کے صحت ملازمین پولیو مہم میں حصہ لینے پر رضامند

ضلع لکی مروت کے صحت ملازمین پولیو مہم میں حصہ لینے پر رضامند

خیبر پختونخوا کے ضلع لکی مروت میں ڈپٹی کمشنر سے کامیاب مذاکرات کے بعد محکمہ صحت کے ملازمین نے پولیو مہم سے بائیکاٹ ختم کرنے کا اعلان کردیا۔

محکمہ صحت ملازمین نے ضلعی صحت آفیسر کے تبادلے کا مطالبہ کیا تھا اور اس ضمن میں ڈپٹی کمشنر نے سیکرٹری ہیلتھ ڈپارٹمنٹ کو ایک خط ارسال کردیا ہے۔

محکمہ صحت لکی مروت کے ملازمین نے گزشتہ ماہ سے ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفیسر طاؤس کے خلاف علامتی احتجاج شروع کیا تھا اور اس ضمن میں ضلع کے تمام سرکاری ملازمین کی تنظیم آل ایمپلائز کوآرڈنیٹر کونسل کا تعاؤن بھی انہیں حاصل تھا۔

صحت ملازمین نے دھمکی دی تھی کہ ضلعی صحت آفیسر کو تبدیل نہ کیا گیا تو کل پیر کے روز سے شروع ہونے والے پولیو مہم سے بائیکاٹ کیا جائے گا، اس ضمن میں آج آل ایمپلائز کوآرڈنیشن کونسل کے وفد نے ڈپٹی کمشنر کے ساتھ ملاقات کی، اس دوران ڈی سی کی جانب سے ڈی ایچ او کے تبادلے کےلئے ہیلتھ سیکرٹری خیبرپختونخوا کو خط ارسال کیا گیا جس کے بعد ملازمین نے پولیو مہم سے بائیکاٹ ختم کرنے کا اعلان کردیا۔

یاد رہے کہ ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفیسر اور پیرامیڈیکس ملازمین کے مابین 26 نومبر کو ایک تنازعہ سامنے آیا تھا، پیرامیڈٰیکس ملازمین نے یہ الزام عائد کیا تھا کہ ضلعی صحت آفیسر نے لکی کے مین سٹور میں ادویات کی وافر مقدار میں موجودگی کے باوجود ہسپتالوں کو ادویات کی ترسیل معطل کر رکھی ہے لہٰذا حکومت اُن کا فوری طور پر تبادلہ کرے اور دوسرا یہ کہ وہ غیر قانونی بھرتیاں بھی کررہا ہے تاہم اس کے جواب میں ڈی ایچ او نے ان تمام الزامات کو رد کرتے ہوئے کہا تھا کہ یہ ملازمین اُن کے دفتر میں آئے تھے اور بھرتیوں کے عمل پر اثر انداز ہونے کےلئے اُس پر دباؤ ڈالنے کی کوشش کی تھی۔

تبصرہ کریں

Check Also

نوجوان کی خود کشی کی کوشش، اسپتال منتقل

سوات (باخبر سوات ڈاٹ کام) سیدو شریف کے علاقہ مرغزار میں نوجوان نے خود پر فائرنگ کرکے اقدام خود کشی کر لیا۔ سلیمان نے نامعلوم وجوہات کی بنا پر پستول سے خود پر فائرنگ کی جس کو زخمی حالت میں طبی امداد کے لئے سیدو شریف ہسپتال منتقل کردیا گیا ۔

Pin It on Pinterest

Shares
Share This